Turkey Election
Turkey Election

Turkey Election

ترک صدر کی جماعت جسٹس اینڈڈولپمنٹ پارٹی نے اتحادیوں کے ساتھ مل کر بلدیاتی انتخابات میں برتری حاصل کر لی ہے۔ اس کے علاوہ ترک صدر نے دو شہروں میں انقراہ اور استنبول میں شکست تسلیم کر لی ہے۔ خبر رساں اداروں نے گزشتہ روز ترقی کے بلدیاتی انتخابات کا عمل 81 صوبوں میں مکمل ہونے کے بعد 98 فی صد ووٹوں کی گنتی ہوچکی ہے۔

غیرسرکاری نتائج کے مطابق ترک صدر طیب اردوان کی جماعت جسٹس اینڈ ڈویلپمنٹ پارٹی نے اتحادیوں کے ساتھ مل کر کامیابی حاصل کر لی ہے۔ رپورٹس کے مطابق اتحادی جماعتوں کے ساتھ مل کر 51-7ووٹ حاصل کیے ہیں. تاہم ابھی بھی دو فی صد نتائج باقی ہیں۔ جس کے بعد سرکاری نتائج کا اعلان سپریم الیکوڑل کونسل کی جانب سے کیا جائے گا۔

طیب اردگان, امریکہ یہ کیا بدمعاشی ہے

دوسری جانب ریپبلکن پیپلز پارٹی کی سربراہی میں بننے والا قومی اتحاد ملک بھر سے 36-6 فی صد ووٹ حاصل کریں گے۔ تاہم حیران کن صورتحال پر قومی اتحادی ترکی کے دارلحکومت انقرہ میں ترک صدر کی جماعت کو شکست دینے میں کامیاب رہا۔ اس کے علاوہ استنبول کے ابھی غیر حتمی نتائج سامنے آئے ہیں.

Turkey Election: Tayyip Erdogan Admit defeat in Istanbul and Ankara Elections. He is Shaked hands with Justice and Development Party.

LEAVE A REPLY

Connect with: